حاضِر جَواب {حا + ضِر + جَواب} (عربی)

عربی زبان سے مشتق اسم حاضر کے ساتھ عربی ہی سے مشتق اسم جواب لگانے سے مرکب بنا۔ اردو میں بطور صفت استعمال ہوتا ہے اور تحریراً سب سے پہلے 1635ء کو "سب رس" میں مستعمل ملتا ہے۔

صفت ذاتی

معانیترميم

1. وہ شخص جو فوراً برمحل اور موزوں بات کہے، بلاتامل معقول جواب دینے والا، فی البدیہہ جواب دینے والا۔

"آدمی تھا حاضر جواب بولا حضور میں .... تو اپنی جان ہی سے چلا۔"، [1]

انگریزی ترجمہترميم

ready with an answer or reply; ready-witted, pert

مترادفاتترميم

حاضِر دِماغ

حوالہ جاتترميم

  1. ( 1962ء، ساقی، کراچی، جولائی، 47 )

فارسیترميم

صفتترميم

حاضر جواب

  1. حاضر جواب