حال حال {حال + حال} (عربی)

عربی زبان سے ماخوذ اسم حال کی تکرار سے اردو میں حال حال بنا اور بطور متعلق فعل مستعمل ہے اردو میں پہلے 1784ء میں "سحرالبیان" میں استعمال کیا گیا۔

متعلق فعل

معانیترميم

1. تیزی سے، جلدی سے، پھرتی سے، فوراً۔

؎ کئی اشرفی اور جواہر نکال

اجورے میں اس کے دیئے حال حال، [1]

حوالہ جاتترميم

  1. ( 1802ء، بہار دانش، مرزا جان طپش، 18 )